پاکستان

سندھ حکومت کا کورونا سے نمٹنے کیلیے مزید 5 اسپتال قائم کرنے کا فیصلہ

[ad_1]

 کراچی: سندھ حکومت نے کورونا کی وبائی صورتحال سے نپٹنے کے لیے کراچی میں مزید 5 اسپتال قائم کرنے کا فیصلہ کرلیا جب کہ وزیر صحت سندھ نے جولائی کے مہینے تک 800 بستروں پر مشتمل ایچ ڈی یو قائم کرنے اور وینٹی لیٹرز کی تعداد میں اضافہ کرنے کا بھی اعلان کردیا۔

وزیر صحت سندھ ڈاکٹر عذرا فضل پیچوہو نے اپنے ویڈیو بیان میں کہا ہے کہ کورونا وائرس کی صورتحال کے پیش نظر جولائی کے آخر تک 800 بیڈز پر مشتمل ہائے ڈپینڈنسی یونٹ (ایچ ڈی یو) قائم کردیے جائیں گے، علاوہ ازیں جولائی کے آخر تک 210 وینٹی لیٹرز کا بھی اضافہ کیا جائے گا، 140 بستروں پر مشتمل ہاۓ ڈپینڈنسی یونٹ کی سہولت رواں ماہ کے آخر تک ایکسپو سینٹر میں بھی مہیا کردی جاۓ گی۔

ان کا کہنا تھا کہ کورونا وائرس کے مریضوں کے لیے مختص ہاۓ ڈپیڈنسی یونٹ عام یونٹ سے تھوڑا مختلف ہوتا ہے جس میں آکسیجن کی فراہمی کے علاوہ طبی عملے کو انفیکشن سے بچانے کے لیے ضروری اقدمات کیے جاتے ہیں۔

وزیر صحت سندھ کا کہنا تھا کہ محکمہ صحت انتہائی نگہداشت وارڈ اور مریض کو آکسیجن کی فراہمی کے لیے ضروری اقدامات کر رہا ہے، ایکسپورٹ پر پابندی کی وجہ سے شروع میں وینٹی لیٹرز کی خریداری میں بہت مشکلات پیش آئیں، اقدامات اپنی جگہ اچھا حل یہی ہے کہ ہم زیادہ سے زیادہ احتیاط کریں۔



[ad_2]

Show More

Related Articles

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button